پاؤں کی بدبو

پاؤں کی بدبو

پاؤں وہ اعضاء ہیں جو پورے جسم کا بوجھ اٹھانے کے ساتھ ساتھ ہمیں حرکت کے بھی قابل بناتے ہیں۔ انہیں ہلکی سی چوٹ لگ جائے یا ان میں درد ہوتو چلنے پھرنے میں شدید دشواری کا سامنا کرنا پڑجاتا ہے۔ ان پرموسمی اثرات بھی زیادہ ہوتے ہیں ۔ مثلاً سردیوں میں ایڑیاں پھٹنے لگتی ہیں جبکہ گرمیوں میں کچھ افراد کو پاؤں جلتے محسوس ہوتے یا ان سے بد بو آتی ہے۔ ان کی حفاظت اوردیکھ بھال سے متعلق چند ٹپس یہ ہیں

صفائی کا درست طریقہ

٭پاؤں کونیم گرم پانی اوراینٹی بیکٹیریل صابن سے اچھی طرح دھوئیں۔ دھونے کے بعد انہیں مکمل طورپرخشک کریں۔ انگلیوں کے بیچ کی جگہ کولازماً خشک کریں۔

٭پاؤں کی بدبو سے نجات کے لئے روزانہ ایک حصہ سرکہ اور تین حصے نیم گرم پانی کے محلول میں 30منٹ کے لئے اپنے پاؤں کو ڈبوئیں۔ یہ محلول بدبو پیدا کرنے والے بیکٹیریا سے نجات دلاتا ہے۔

٭اس کے بعد بدبو دورکرنے والا یا پسینہ روکنے/کم کرنے والا سپرے استعمال کریں۔

پاؤں کے ناخن

٭پاؤں کے ناخنوں کوہرہفتے یا کم ازکم 15 دن بعد ضرورکاٹیں۔ شوگرکے مریض یا پاؤں کومتاثر کرنے والی کسی اوربیماری کے شکارافراد اپنے پاؤں کے ناخن احتیاط سے کاٹیں۔ اگرضروری ہوتو کسی اورکی مدد لے لیں۔

٭صحت مند ناخنوں کا رنگ ہلکا گلابی ہوتا ہے۔ اگر ان کی رنگت خراب ہوتویہ کسی اندرونی بیماری کی علامت ہوسکتی ہے۔ ایسے افراد ناخنوں پرنیل پالش لگانے سے گریزکریں۔

جوتوں کا درست انتخاب

٭گرمیوں میں پلاسٹک یا نائیلون کے جوتوں کی جگہ چمڑے، کینوس اورمیش کے بنے جوتوں کو ترجیح دیں کیونکہ یہ ہوادارہوتے ہیں۔ ہوا کے گزرسے پاؤں میں پسینہ کم آتا ہے اوربدبو پیدا نہیں ہوتی۔

٭دو دن تک ایک ہی جوتا مسلسل پہننے سے اجتناب کریں کیونکہ اس طرح جوتے میں موجود نمی مکمل طورپرخشک نہیں ہو پاتی اورپاؤں سے بدبو کا باعث بنتی ہے۔

٭روزانہ صاف اورکاٹن کے بنے ہوئے موزے پہنیں۔ یہ نمی کو جذب کرنے اوربدبو پیدا کرنے والے بیکٹیریا سے بچاؤ میں مدد دیتے ہیں۔

٭جوتوں میں میڈیکیٹڈ تلوؤں کوترجیح دیں۔

توجہ طلب علامات

٭پاؤں میں مسلسل درد کی شکایت رہنے لگے، ان پرچھالے یا دانے ہوں یا جلد پھٹی ہوتو اسے نظراندازنہ کریں۔

٭پاؤں ایک جانب سے ٹھنڈے اوردوسری جانب سے گرم ہوں تو یہ دورانِ خون میں رکاوٹ کی علامت ہو سکتی ہے۔

٭پاؤں کا درد‘سنسناہٹ کا احساس یا ان کا سن ہونا کسی اعصابی بیماری کی جانب اشارہ ہوسکتا ہے۔

٭پاؤں کے ناخن سرخ ہوں‘ ان میں درد ہواور ان کی جانب جلد پھولی سی لگنے لگے تو معالج سے رجوع کریں۔

smelly feet, foot care, how to remove smell from feet, red nails, tingling in feet

LEAVE YOUR COMMENTS