ہتھیلی, انگوٹھے اور درمیانی انگلی میں درد

1.065K

بعض اوقات کلائی سے گزرنے والی ایک نس دبنا شروع ہو جاتی ہے جس کی وجہ سے ہتھیلی خصوصاًانگھوٹھے اور درمیانی انگلی میںدرد ہوتا ہے۔اس کے علاوہ ہاتھ کے اسی حصے میں چبھن محسوس ہوتی ہے اور وہ جگہ سن ہوجاتی ہے ۔مریض عموماً شکایت کرتا ہے کہ وہ کسی چیز کو ٹھیک طرح سے پکڑ نہیں سکتا۔ اگر اس کا علاج نہ کروایا جائے تو بازو اور کندھے میں بھی درد شروع ہو جاتا ہے۔

وجوہات:
اس بیماری کی مختلف وجوہات ہیں جن میںذیابیطس،موٹاپااورحمل وغیرہ شامل ہیں۔ کلائی کی ہڈیاں اگر کسی چوٹ کی وجہ سے ایک دوسرے سے جڑ جائیںیا ان کے درمیان کا فاصلہ کم ہو جائے تو بھی یہ کیفیت ہو سکتی ہے۔ روزمرہ کے بعض کام جن میں بھاری اشیاءاٹھانے اورکمپیوٹر پرزیادہ دیر تک ٹائپنگ کرنے سے بھی کلائی کی ہڈی میں درد ہونے اور نس دبنے کا اندیشہ ہوتاہے۔

علامات:
٭ہاتھ کے انگوٹھے اور اس کے ساتھ کی دو انگلیوں کا سن ہونا۔
٭رات کو عموماً غلط طریقے سے سونے سے درد کا بڑھ جانا۔
٭ہاتھ میں طاقت کم ہونا۔
٭ہتھیلی کے پٹھوں کا سکڑ جانا۔

علاج:
آپریشن کے بغیر طریقہ علاج میں رات کو سوتے وقت لکڑی کی کھیچی(Night Splint )یا کپڑے کی پٹی استعمال کی جاتی ہے تاکہ نس کو مزید دبنے سے روکا جا سکے۔ اس کے علاوہ فزیوتھیراپسٹ کچھ ٹیسٹوں کے علاوہ ہاتھ اور کلائی کو مخصوص انداز میں حرکت دے کر بھی اس کی تشخیص کرتے ہیں۔اگر اس کی وجہ سے درد بڑھ جائے یا انگلیاں سن ہونا شروع ہو جائیں تو اس ٹیسٹ کو پازیٹیو قرار دے کر علاج شروع کیا جاتا ہے۔ ہاتھ کو طاقت دینے کے لیے مختلف ورزشیں کروائی جاتی ہیں ۔ان کا مقصد پٹھوں کو مضبوط کرنا ہے۔
ورزشیں نمبر 1

٭ نرم گیند کی مدد سے ورزش کے ذریعے مریض کے ہاتھ کی گرفت کو مضبوط کیا جاتا ہے تاکہ وہ چیزوں کو مضبوطی سے پکڑ سکے۔اس کے لیے گیند مٹھی میں لیں۔ انگلیوں اور ہتھیلی کی مدد سے اسے دبائیں۔


٭ہاتھ کو انگلیاں جوڑتے ہوئے کھولیں اور پھر انگلیوں کو درمیان سے موڑیں۔


٭انگلیوں کوسات (7)کی شکل میں موڑیں پھر انہیں ہتھیلی کے طرف لے آئیں۔


٭ مٹھی بند کریں اور کھولیں۔
ان ورزشوں کو دن میں کسی بھی وقت کیا جا سکتا ہے ۔ جب بھی یہ ورزش کریں‘ سات سے آٹھ دفعہ کریں۔

ورزش نمبر 2
ہاتھ کو نیم گرم پانی میںاس طرح ڈبوئیں کہ ہاتھ اور کلائی کے اوپر کا حصہ پانی میں ڈوبا ہوا ہو۔ اس کا مقصد ہاتھ کوگرماہٹ پہنچانا ہے۔ اس کے لیے ایک مشین بھی استعمال ہوتی ہے جسے پارافن ویکس مشین (Paraffin Wax Machine)کہتے ہیں۔اس میں ہاتھ ڈبویا جاتا ہے تاکہ اسے حرارت دی جا سکے۔


ورزش نمبر3
مریض کو بتایا جاتا ہے کہ وہ گردن اور کمر کے اوپر کے حصے کودرست پوزیشن میں رکھے ۔اس میں درست انداز میں بیٹھنے اورکھڑے ہونے کو بہت اہمیت حاصل ہے۔
٭جب کھڑے ہوں تو اس بات کا خیال رکھیں کہ آپ نہ آگے کو جھکے ہوں اور نہ ہی پیچھے کی طرف آپ کاجھکاﺅ ہو۔آپ کو چاہئے کہ بغیر اکڑاﺅ کے سیدھے کھڑے ہوں۔


٭بیٹھنے کا صحیح انداز بھی بہت ضروری ہے ۔آپ کمر کو اندر کی طرف جھکا کر مت بیٹھیںاور نہ ہی پیچھے کی طرف جھکاﺅ رکھیں۔

مزید پڑھیں/ Read More

متعلقہ اشاعت/ Related Posts

Rheumatoid Arthritis

انسانی جسم کو حرکت میں رکھنے میںجوڑوں کا کردار بہت اہم

ڈھوک کالا خان (راولپنڈی) کی رہائشی 65سالہ نسیم اختر کو گز

Leave a Reply

Leave a Reply

  Subscribe  
Notify of