سحری میں کیا کھائیں، کیا نہیں

3

سحری میں کیا کھائیں، کیا نہیں

رمضان میں کئی لوگ شکایت کرتے ہیں کہ ان سے سحری کے وقت کچھ کھایا نہیں جاتا۔ ایسے میں وہ بہت کم کھانا کھاتے ہیں جس کے باعث دن کوجلدی بھوک لگ جاتی ہے۔ دوسری طرف کچھ لوگوں کویہ پریشانی ہوتی ہے کہ دن بھربھوکا رہنا ہے لہٰذا وہ پیٹ بھرنے کے لئے پراٹھے کھانا شروع کردیتے ہیں تاکہ وہ دیرسے ہضم ہوں اورجلد بھوک نہ لگے۔

شفا انٹرنیشنل ہسپتال اسلام آباد کی ماہرغذائیات زینب بی بی کا کہنا ہے کہ سحری میں بہت کم تیل میں بنی ہوئی چیزیں کھانی چاہئیں۔

پراٹھوں کے بجائے سادہ روٹیوں کوگھی یا کوکنگ آئل سے ہلکا سا چکنا کرلیں۔ بعض علاقوں میں لسی کے ساتھ رات کی بچی ہوئی روٹی یا پراٹھے اوردہی کے ساتھ سحری کرنے کا رواج ہے۔ دہی بہت ہی زبردست چیز ہے جو بھرپور غذائیت دیتا ہے۔ کچھ گھروں میں دودھ‘ سویاں اورپھینیاں سحری میں بڑے شوق سے کھائی جاتی ہیں۔ ترکاریوں میں ہری سبزیاں مثلاً ٹینڈے‘ توری‘ لوبیا اورسیم کی پھلیاں(کچا سفید لوبیا) پکا کرکھائیں۔ نوڈلزمیں سبزیاں اوردوتین بوٹیاں چکن کی ڈال کرکھانے سے بھی مکمل غذائیت ملے گی۔

راولپنڈی کے میڈیکل سپیشلسٹ ڈاکٹرظفراقبال ملک کے مطابق سب سے اہم بات یہ ہے کہ سحری کے وقت زیادہ مرغن یا پروٹین والی غذائیں یعنی گوشت وغیرہ کم کھائیں

پروٹین کوہضم کرنے کے لئے زیادہ پانی کی ضرورت ہوتی ہے۔ سحری میں پروٹین کی حامل اشیاء کھانے سے دن بھرزیادہ پیاس لگے گی لہٰذا سحری کو سادہ رکھیں۔ دہی میں زیرہ یا الائچی شامل کرکے کھائیں یا لسی پینے کو معمول بنائیں۔ غذا کوئی بھی کھائیں‘ اس میں نمک کی مقدارکم رکھیں۔ اگرچہ جسم کو درکارپانی کی مقدارمعلوم کرنے کا کوئی ایک فارمولا نہیں لیکن ایک صحت مند شخص کے لئے 24 گھنٹوں میں اوسطاً 12گلاس پانی پینا تجویزکیا جاتا ہے۔ بہترہے کہ یہ تعداد افطاری کے بعد سحری تک آہستہ آہستہ پوری کریں۔ سحری میں دوسے تین گلاس پانی ضرورپئیں۔

Foods to eat and avoid in suhoor, sehri , Ramzan

0 0 vote
Article Rating
Subscribe
Notify of
guest
0 Comments
Inline Feedbacks
View all comments
0
Would love your thoughts, please comment.x
()
x