بچپن جسے کبھی خوشیوں‘بے فکری اور شرارتوں کا زمانہ کہا جاتاتھا‘آج کل بھاری بستوں‘اچھے نمبر لینے کے دباﺅ‘ والدین کی بہت زیادہ توقعات‘ جسمانی کھیل کود کے کم ہوتے مواقع اور ٹیکنالوجی

Recently I got a chance to attend a presentation on anger management at my children's school. It was really a thought provoking discussion that made me realize how most of us become authoritative and assertive after becoming a parent. We often take our children as punching bags to take out our personal frustrations without thinking how mu

    چھ ماہ قبل جب سارہ اپنی سات سالہ بیٹی رانیہ کا رزلٹ لے کر گھرلوٹی توبہت غصے میں تھی‘ اس لئے کہ وہ بمشکل پاس ہوئی تھی۔اپنے زمانہ طالب علمی میں سارہ خود بہت لائق رہی تھی لہٰذا اپنی بچی کی

دانت نکالنے کی عمر میں بچے چڑچڑے ہو جاتے ہیں، انہیں مسوڑھوں اور دانتوں میں تکلیف ہوتی ہے اور بعض اوقات تووہ کھانا پینا بھی چھوڑ دیتے ہیں۔ماو¿ں کی بد احتیاطی کی وجہ سے اکثر اوقات انہیں پیچش

جس طرح ہر بچہ شکل و شباہت ‘ قد اور رنگت میں مختلف ہوتا ہے‘اسی طرح اس کی ذہنی صلاحیتیں بھی مختلف ہوتی ہیں۔ کچھ بچے جلدی سیکھ لیتے ہیں تو کچھ کو اس میں دشواریوں کا سامنا ہوتا ہے ۔کچھ تو ٹھیک ط

والدین کابچوں کی تربیت میں ہر وقت اپنی بات منوانے پر اصرار دانشمندی نہیں۔یہ عمل بچوں میں بغاوت کو ابھارتا ہے اور وہ ماں باپ سے متنفر ہو جاتے ہیں۔شفا انٹر نیشنل ہسپتال اسلام آباد کی کلینیکل